Sach Pe Ghalib Hua Jhool: Ghazal by Zeeshan Noor Siddiqui

Sach Pe Ghalib Hua Jhool: Ghazal by Zeeshan Noor Siddiqui

 

سچ پہ غالب ھوا جھوٹ ، یارب سنو

ذیشان نور صدیقی

سچ پہ غالب ھوا جھوٹ ، یارب سنو
پارسا وه ھے! جس نے نہ سجده کیا
زخم دے دے کے بھی وه مسیحا ہوۓ
ہم گنہگار ھیں ! جو جگر کو سیا
پارسائی ملی ساقی و رند کو
ہم شرابی ھوۓ ، جو نظر سے پیا
کافر انکی ادا ، تیغ نظروں میں ھے
آنکھیں ملتے ہی سینے سے دل لے لیا
جس کو پوجا محبت میں اس نے ھمیں
بے وفا ! بے وفا ! بے وفا ! کہہ دیا
دشمنوں کی محبت نوازی ھمیں
اے خدا ! اے خدا ! یہ بتا کیا کیا ؟
زند گی ختم کر لی، خود ہی ایک دن
جتنا ھم جی سکے، ذیش کھل کے جیا

 

ghazal

 

 

Facebook Comments

You may also like...