Pichlay Saal December Main: Urdu Nazm by Tariq Iqbal Haavi

Pichlay Saal December Main: Urdu Nazm by Tariq Iqbal Haavi

 

پچھلے سال دسمبر میں
یونہی خنک خنک سی شامیں تھیں
زرد زرد سب منظر تھے
ہر سو دھند کے پہرے تھے
یاد ہے تم کو، کچھ دن تم بھی
میرے گھر میں ٹھہرے تھے
تب سے لیکر ، اب تک یہ گھر
یادوں کے حصار میں ہے
میرے گھر کی، ہر شے اب تک
چاہت کے خمار میں ہے
احساس محبت باقی ہے
سنبھالا ہے، اگرچہ خالی ہے
کیونکہ ۔ ۔ ۔ تیرے ہاتھ کی خوشبو اب تک
کافی کے اس جار میں ہے

(شاعر: طارق اقبال حاوی)

 

tony-ross-winter

 

Facebook Comments

You may also like...