Na Cheen Abhi Mujh Se Yeh Maei Ka Jaam: Urdu Ghazal by Numan Ijaz

Na Cheen Abhi Mujh Se Yeh Maei Ka Jaam: Urdu Ghazal by Numan Ijaz

 

chalo aisa karte hain - urdu poem

 

نہ چھین ابھی مجھ سے یہ مہ کا جام
پڑے ہیں ابھی آنسو میرے سرِ بام

گر چھینا تو رووں گا زار و زار
پھر دیکھ کر حالت نہ دینا کسی کو الزام

مجھے سکون ائے بھی تو بھلا کیسے
ناراض ہے وہ جسنے رکھا میرا نام

کہا چھوڑ علم و تدریس بیٹھ کسی چوڑاہے پر
یا چھوڑ بُڑے کام یا نہ کر مجھ سے کلام

ہاں میرا ہے قصور، میں مانتا ہوں،، تو کیا کروں
ہو جاو گا بری لے کر، قسمت و تقدیر کا نام

نعمانؔ اعجاز

 

 

Facebook Comments

You may also like...